مرکز احیاء آثار برصغیر مآب (ادارہ) سے مندرجہ ذیل طریقہ سے تعاون کر سکتے ہیں۔

مالی تعاون، اہداء کتب، نادر الوجود کتابوں کی فوٹو کاپی یا سی ڈیز ارسال کر کے، قلمی و دیگر قدیمی کتابوں کے بارے میں اطلاع دے کر کہ فلاں کتاب فلاں صاحب یا فلاں کتابخانہ میں ہے ، جن کے پاس قلمی و نادر الوجود کتابیں ہیں وہ مرکز کے نمائندگان کو فوٹو لینے کی اجازت دیں

ضائع و خراب ہوتے نادر و نایاب قلمی نسخہ جات
ضائع و خراب ہوتے نادر و نایاب قلمی نسخہ جات کی حفاظت و دوبارہ شائع کروا کر

ضائع و خراب ہوتے نادر و نایاب قلمی نسخہ جات کی حفاظت و ، دوبارہ شائع کروا کر اس علمی میراث کو ضائع ہونے سے بچانے کے پیشِ نظر خدا کی بابرکت ذات پر بھروسہ کرتے ہوئے۔ مرکز احیاءآثار برصغیر (مآب) وجود میں آیا ہے۔

جمع آوری نادر و نایاب کتب
جمع آوری نادر و نایاب کتب

مرکز احیاء آثار برصغیر (مآب) کے مسئول جمع آوری نادر و نایاب کتب کے لئے مختلف ممالک کے دورہ جات کرتے ہیں اور کتابوں کو ان کی بیش بہا قیمت ادا کر کے حاصل کیا جاتا ہے اور مرکز کے کتابخانہ میں محفوظ کر لیا جاتا ہے۔

شیعی تاریخی موقوفات و مقامات
شیعی تاریخی موقوفات و مقامات

آپ ہم کو اپنے اردگرد شیعہ تاریخی موقوفات و مقامات کے متعلق بھی تمام اہم اور مستند معلومات فراہم کر کے بھی تعاون کر سکتے ہیں، مثلاً شیعہ مساجد، امام بارگاہیں، شیعہ مدارس، شیعہ کتاب خانے، شیعہ سے متعلق دیگر مقامات۔

مقابر علماء و شخصیات
مقابر علماء و شخصیات

برصغیر کے علماء و اہم شخصیات کی خستہ حال قبور کو از سرِ نو تعمیر کروانا ان کے مزارات کی مرمت وغیرہ بھی مرکز احیاء آثار برصغیر(مآب) کے اہداف ومقاصد میں ہے تا کہ اپنے اِن محسنان ملت کے علمی میراث کے ساتھ ان کی قبور کو بھی محفوظ رکھا جا سکے

سادات و دیگر خاندان کا تعارف
سادات و دیگر خاندان کا تعارف

جہاں مآب کے دیگر اہداف و مقاصد ہیں وہاں برصغیر کے سادات اکرام و دیگر خاندانوں کے حالات بھی رقم کرنا شامل ہے۔ جن احباب کے پاس خاندانوں کے متعلق کوئی ٹھوس معلومات ہوں وہ ہماری مآب کی ویب سائٹ پر آن لائن فارم فل کر کے یا مآب پروفارمہ کے ذریعہ بھیج سکتے ہیں۔

previous arrow
next arrow
1140
کتب کی تعداد
405
مؤلفین کتب
375
ناشران کی تعداد
20
شخصیات کی تعداد
1022
اُردوکتب کی تعداد
45
فارسی کتب کی تعداد
40
عربی کتب کی تعداد
4
انگلش کتب کی تعداد
سوشل میڈیا پر شئیر کریں: